تمام ضعیف احادیث کو بغیر ترتیب سے دیکھنے کیلئے بٹن پر کلک کریں

Friday, February 14, 2014

٭ جنگ یمامہ میں یا محمد کا نعرہ


جنگِ یمامہ میں مسلیمہ کذاب کے ساتھ فوج کی تعداد ساٹھ ہزار تھی، جبکہ مسلمانوں کی تعداد کم تھی۔ مقابلہ بہت شدید تھا۔ ایک وقت نوبت یہاں تک پہنچ گئی کہ مسلمان مجاہدین کے پاؤں اکھڑنے لگے۔ سیدنا خالد بن ولید رضی اللہ عنہ سپہ سالار تھے۔ انہوں نے یہ حالت دیکھی تو:
و نادی بشعارھم یومئذ، و کان شعارھم یومئذ: یا محمداہ !
"انہوں نے مسلمانوں کا نعرہ بلند کیا۔ اس دن مسلمانوں کا نعرہ یَامحمداہ تھا۔"
(تاریخ الطبری: 181/2 ، البدایۃ النھایۃ لابن کثیر: 324/6)
موضوع(من گھڑت): یہ روایت موضوع ہے، کیونکہ:
٭ اس میں سیف بن عمر کوفی راوی بالاتفاق "ضعیف و متروک" موجود ہے۔
٭ شعیب بن ابراہیم کوفی "مجہول" ہے۔
٭ ضحاک بن یربوع کی توثیق نہیں ملی۔
٭اس کا باپ یربوع کیسا ہے؟ معلوم نہیں ہوسکا۔
٭ رجل من سحیم کا کوئی اتہ پتہ نہیں۔

No comments:

تبصرہ کیجئے