تمام ضعیف احادیث کو بغیر ترتیب سے دیکھنے کیلئے بٹن پر کلک کریں

Thursday, February 06, 2014

٭ نصف (15)شعبان سے متعلق ضعیف روایات



نصف  (15)شعبان سے متعلق ضعیف روایات
"جس نے پندرہویں شعبان کی رات میں سو رکعتوں  میں ایک ہزار بار "قل ھو اللہ أحد" پڑھی تو وہ دنیا سے اس حالت میں روانہ ہوگا کہ اللہ تعالیٰ اس کی خواب میں سو فرشتے بھیجے گا، تیس جنت کی بشارت دیں گے ،  تیس جہنم سے بچائیں گے ، اور دس اسے اس  کے دشمنوں کی سازش سے بچائیں گے"۔ (مسند احمد: 176/2)
اس روایت کو امام منذری نے ضعیف (ترغیب : 460/3) اور  امام ابن الجوزی نے  (الموضوعات الکبری : 125/2) امام سیوطی  نے (تنزیہہ الشریعۃ : 93/2) ابن عراق نے (اللآلی المصنوعۃ: 59/2) میں  موضو ع قرار دیا ہے۔

3 comments:

  1. سنن ابن ماجہ:جلد اول:حدیث نمبر 1388 حدیث مرفوع مکررات 10
    حسن بن علی خلال، عبدالرزاق، ابن ابی سبرة، ابراہیم بن محمد، معاویہ بن عبداللہ بن جعفر، عبداللہ بن جعفر، حضرت علی بن ابی طالب فرماتے ہیں کہ رسول صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم نے فرمایا جب نصف شعبان کی رات ہو تو رات کو عبادت کرو اور آئندہ دن روزہ رکھو اس لئے کہ اس میں غروب شمس سے فجر طلووع ہونے تک آسمان دنیا پر اللہ تعالیٰ نزول فرماتے ہیں اور یہ کہتے ہیں ہے کوئی مغفرت کا طلبگار کہ میں اس کی مغفرت کروں۔ کوئی روزی کا طلبگار کہ میں اس کو روزی دوں۔ ہے کوئی بیمار کہ میں اس کو بیماری سے عافیت دوں ہے کوئی ایسا ہے کوئی۔ یہاں تک کہ فجر طلوع ہو جاتی ہے

    ReplyDelete
    Replies
    1. آپ کی بیان کردہ روایت موضوع (من گھڑت) ہے۔ اور جہاں تک اللہ کا آسمان پر نزول ہونے کا تعلق ہے تو وہ صرف 15 شعبان نہیں ہر رات ہوتا ہے،

      http://zaeefhadees.blogspot.com/2014/02/15.html

      Delete
  2. رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا کہ ہمارا پروردگار بلند برکت والا ہے ہر رات کو اس وقت آسمان دنیا پر آتا ہے جب رات کا آخری تہائی حصہ رہ جاتا ہے ۔ وہ کہتا ہے کوئی مجھ سے دعا کرنے والا ہے کہ میں اس کی دعا قبول کروں ، کوئی مجھ سے مانگنے والا ہے کہ میں اسے دوں کوئی مجھ سے بخشش طلب کرنے والا ہے کہ میں اس کو بخش دوں ۔
    صحیھ بخاری، کتااب التہجد، باب الدُّعَاءِ وَالصَّلاَةِ مِنْ آخِرِ اللَّيْلِ: 1145

    ReplyDelete