تمام ضعیف احادیث کو بغیر ترتیب سے دیکھنے کیلئے بٹن پر کلک کریں

Tuesday, November 25, 2014

٭ قادیانیوں کی مردود روایات


اللہ نے عیسیٰ علیہ السلام کی طرف وحی کی کہ۔۔۔۔
 
” اوحی اللہ تعالیٰ اِلیٰ عیسیٰ انتقل من مکان اِلیٰ مکان لئلا تعرف فتؤذی“ (کنز العمال جلد ۲ص۳۴)
” اللہ تعالیٰ نے حضرت  عیسیٰ کی طرف وحی کی کہ اے عیسیٰ ! تو ایک  جگہ سے دوسری جگہ چلا جا، تا ایسا نہ ہو کہ تُو پہچانا جائے اور تجھے تکلیف دی جائے۔ “
(قادیانی پاکٹ بک ص۲۰۳۔ ۲۰۴)
ضعیف:  اس روایت کے بعد صاحب کنز العمال نے لکھا ہے:
"کر عن أبي ھریرۃ وفیه ھانئ بن المتوکل السکندراني، قال فی المغني: مجھول" اسے ابن عساکر نے (تاریخ دمشق میں) ابو ہریرہ (رضی اللہ عنہ) سے روایت کیا اور اس سند میں ہانی بن متوکل الاسکندرانی ہے، اس کے بارے میں (ذہبی نے) المغنی میں فرمایا: مجہول ہے۔ (ج۳ص۱۵۸ح۵۹۵۵)
نیز دیکھئے تاریخ دمشق لابن عساکر (۱۸۸/۵۶۔ ۱۸۹) تاریخ بغداد للخطیب (۵۳۳/۴ت۱۱۳۴)
عبد الرحمٰن خادم قادیانی نے صاحبِ کتاب کی اس جرح کو چھپا کر ان لوگوں کی یاد تازہ کردی، جنھیں بندر اور خنزیر بنادیا گیا تھا۔
٭ہانی المتوکل کے بارے میں حافظ ابن حبان نے فرمایا: "فکثر المناکیر في روایته فلا یجوز الاحتجاج به حال" پس اس کی روایتیوں میں منکر روایتیوں کی کثرت ہوگئی لہٰذا کسی حال میں بھی اس سے حجت پکڑنا جائز نہیں۔ (المجروحین: ۹۷/۳)
٭حافظ ذہبی نے اسے المغنی فی الضعفاء میں ذکر کیا (۷۰۷/۲ ت ۶۷۲۵) اور ابن حبان کی جرح کی طرف اشارہ کیا۔
اس روایت کی باقی سند بھی مشکوک و مردود ہے۔
 ********

No comments:

تبصرہ کیجئے