تمام ضعیف احادیث کو بغیر ترتیب سے دیکھنے کیلئے بٹن پر کلک کریں

Monday, November 03, 2014

٭ ہمارے اور مشرکین کے مابین فرق


ہمارے اور مشرکین کے مابین فرق
 
فَرْقُ مَا بَيْنَنَا وَبَيْنَ الْمُشْرِكِينَ الْعَمَائِمُ عَلَى الْقَلاَنِسِ
"ہمارے اور مشرکین کے مابین فرق یہ ہے کہ ہم ٹوپی پر عمامہ باندھتے ہیں"
(ابی داود: ۴۰۷۸، ترمذی: ۱۷۸۴)
 ضعیف: اس روایت کی سند ضعیف ہے،
٭ا س کے راوی أبو الحسن العسقلانی اور أبو جعفر "مجہول " ہیں۔(تقریب التھذیب: ۸۰۴۸، ۸۰۱۶)
٭ امام ترمذی رحمہ اللہ یہ روایت  بیان کرنے کے بعد لکھتے ہیں: "یہ حدیث غریب ہے اس کی سند قوی نہیں۔ ابو حسن عسقلانی اور ابن رکانہ کو ہم نہیں جانتے" (سنن الترمذی: ۱۷۸۴)
٭ علامہ البانی رحمہ اللہ نے بھی  اس روایت کو ضعیف قرار دیا ہے۔ (المشكاة : 4340 ، الإرواء :1503 ،  ضعيف الجامع الصغير :3959 ، ضعيف أبی داود :882 / 4078)

No comments:

تبصرہ کیجئے